17اگست
IMG_3527.JPG

اسلام کا علم اور جنرل حمید گل

اسلام کا علم اور جنرل حمید گل

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

کچھ لوگوں کا جنرل صاحب پر بھونکنے کی سب سے بڑی وجہ تو یہ ہے کہ وہ فوت ہوچکے ہیں۔۔۔!!

إنا للہ وإنا إلیہ راجعون۔۔!

دوسری بات ۔۔۔۔۔۔!!!!! 

یہ وہی لوگ ہیں جو سوویت یونین کے آنے پر بغلیں بجارہے تھے اور خوشیاں منارہے تھے کہ سرخ ڈولی پہنچنی والی ہے۔

سرخ ڈولی سے ان کا مراد تھا کہ سرخ انقلاب یعنی روس کے راستے کمیونزم کا سرخ انقلاب آنے والا ہے اور یہ لوگ اس خوش فہمی میں بھی تھے کہ کمیونزم افغانستان میں داخل ہوتے ہی پورے خطے کو اپنی لپیٹ میں لے لیگاجو کہ ان لوگوں کی خوش فہمی یا غلط فہمی تھی۔

یہی وہ لوگ تھے جو سوویت یونین کو افغانستان پر حملے کیلئے سہولتکار و مددگار بنےتھے۔ 

اور ان ہی لوگوں نے سوویت یونین کو خطے پر قبضہ کیلئے راستہ ہموار کرانے اور راستے کا تعین کرانے میں بھرپور مدد فراہم کی تھی لیکن شائد یہ لوگ بھول گئے تھے یا کہ پاکستانی افواج میں ایسے مجاھدین بھی ہیں جو کہ اسلام کے عَلم کو بلند رکھنے کےلئے پہاڑوں اور چٹانوں سے بھی ٹکراسکتے ہیں۔ 

یہ غــــــازی۔۔!! یہ تیرے پُراسرار بندے !

جنہیں تُو نے بخشا ہے ذوق خـــــــدائی !

دو نیم ان کی ٹھوکر سے صحرا و دریا !

سمٹ کر پہاڑ ان کی ہیبت سے رائــــی !

اور ہوا بھی ایسے ہی کہ جنرل حمیدگل صاحب اور ان کے ٹیم نے اسلام کے عَلم کو نیچے نہیں ہونے دیا اور ۔۔!!

بے خطر کُود پڑا آتش نمرود میں عشق ۔۔۔!!!

جنرل صاحب نے ایسی اسٹریٹجیک پالیسی مرتب کی کہ کمیونزم کے خواہاں افغانوں اور ان کے نام نہاد قوم پرست حامیوں کے خوابوں کو مٹی میں ملادیا اور سوویت یونین جیسے سپر پاور کو دن میں تارے دکھاکر تکڑے تکڑے کردیا اور روس کے غلامی میں قید اسلامی ریاستوں کو روس کے پنجے سے نکال کر غلامی سے آزاد کرایا۔  

اور پاکستان کے مجاھد افواج نےجنرل حمیدگل صاحب کی راہنمائی میں افغانستان کے سنگلاخ چٹانوں اور بیابانوں میں وہ جوہر دکھائے کہ سوویت یونین سرپٹ بھاگنے پر مجبور ہوگیا۔

لہٰذا ان بھونکنے والوں کو وہی روگ کھائے جارہا ہے کہ آئی ایس آئی نے اسلام کے مد مقابل کمیونزم کی ڈولی کو فاش فاش کرکے افغان کمیونسٹوں اور نام نہاد قوم پرستوں کے خوابوں کو چکناچور کردیا تھا۔ 

اب کمیونزم کے خواہاں یہ تھوڑے بہت باقیات ہی رہ گئے ہیں جوکہ بھونکتے رہتے ہیں لیکن ان کو بھونکنے دینا چاہئے ۔۔!! ان بیچاروں کا بھونکنا فطری ہے کیونکہ

یہ اپنی اَنا کی تسکین کیلئے بھونک رہے ہیں۔ 

ویسے بھی کمیونزم تو گیا تیل لینے ۔۔۔۔۔!!!!

تحریر : آصف شہزاد ( مینگورہ سوات)

 

Writer | Blogger | Photographer | Pakistani

تبصرے

comments

Share this Story

About Asif Shahzad

Writer | Blogger | Photographer | Pakistani

© Copyright 2015, All Rights Reserved